Sign in to follow this  
Followers 0
Musaffa

حمدِ باریِ تعالیٰ

1 post in this topic

Posted (edited) · Report post

حمدِ باریِ تعالیٰ

 

از: ڈاکٹر محمد حسین مشاہدرضوی

 

بُطونِ سنگ میں کیڑوں کو پالتا ہے تُوہی

صدف میں گوہرِ نایاب ڈھالتا ہے تُوہی

 

دلوں سے رنج و الم کو نکالتا ہے تُوہی

نفَس نفَس میں مَسرّت بھی ڈالتا ہے تُوہی

 

وہ جنّ و انس و مَلک ہوں کہ ہوں چرند و پرند

تمام نوعِ خلائق کو پالتا ہے تُوہی

 

بغیر لغزشِ پا تو ڈبو بھی سکتا ہے

پھسلنے والوں کو بے شک سنبھالتا ہے تُوہی

 

تُو ہی تو مُردہ زمینوں کو زندہ کرتا ہے

گُلوں کے جسم میں خوشبوئیں ڈالتا ہے تُوہی

 

ترے ذبیح کی نازک سی ایڑیوں کے طفیل

سلگتے صحرا سے زم زم نکالتا ہے تُوہی

 

نجات دیتا ہے بندوں کو ہر مصیبت سے

شکم سے مچھلی کے زندہ نکالتا ہے تُوہی

 

جو لوحِ ذہنِ مُشاہدؔ میں بھی نہیں یارب

وہ حرفِ تازہ قلم سے نکالتا ہے تُوہی

Edited by Musaffa
1 person likes this

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!


Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.


Sign In Now
Sign in to follow this  
Followers 0

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

  • Similar Content

    • By Musaffa
      ظلمتِ قلب و نظر پل میں مٹانے کے لیے
      سبز گنبد کی کرن دل میں بسانے کے لیے
      یاخدا! اِذنِ سفر کردے مُشاہدؔ کو عطا
      شوق سے نعت مدینے میں سنانے کے لیے
    • By Musaffa
      مَیں نے نعت گوئی کا جب سے ذوق پایا ہے
      سر پہ میرے رحمت کا تب سے نوری سایا ہے
      فوجِ غم نے گھیرا جب مجھ کو اے جہاں والو!
      رب نے ذکرِ احمد سے میرا غم مِٹایا ہے
    • By Musaffa
      <p style=" margin: 12px auto 6px auto; font-family: Helvetica,Arial,Sans-serif; font-style: normal; font-variant: normal; font-weight: normal; font-size: 14px; line-height: normal; font-size-adjust: none; font-stretch: normal; -x-system-font: none; display: block;"> <a title="View Tashtirat E Bakhshish on Scribd" href="http://www.scribd.com/doc/93218869" style="text-decoration: underline;" >Tashtirat E Bakhshish</a></p><iframe class="scribd_iframe_embed" src="http://www.scribd.com/embeds/93218869/content?start_page=1&view_mode=scroll" data-auto-height="false" data-aspect-ratio="undefined" scrolling="no" id="doc_60163" width="100%" height="600" frameborder="0"></iframe>
    • By Musaffa
      <p style=" margin: 12px auto 6px auto; font-family: Helvetica,Arial,Sans-serif; font-style: normal; font-variant: normal; font-weight: normal; font-size: 14px; line-height: normal; font-size-adjust: none; font-stretch: normal; -x-system-font: none; display: block;"> <a title="View Lamaat E Bakhshish on Scribd" href="http://www.scribd.com/doc/95019206" style="text-decoration: underline;" >Lamaat E Bakhshish</a></p><iframe class="scribd_iframe_embed" src="http://www.scribd.com/embeds/95019206/content?start_page=1&view_mode=scroll" data-auto-height="false" data-aspect-ratio="undefined" scrolling="no" id="doc_68930" width="100%" height="600" frameborder="0"></iframe>