Jump to content
IslamiMehfil

Namaz-E-Ghousia Aur Faizan-E-Sunnat Per Aetaraz


Recommended Posts

Salam,

 

Yay Shirk nahi to aur kya hay?

 

attachicon.gif1780887_677164008992595_1693896297_n.jpg

 

Wasallam.

janab apka ka dimagh lagta he theek nahi ap zara apne scan per pehli heading k tehet dekh len k numaz e ghosia kehtey kis ko hen...ap yahan munazara ker rahey hen or ap is waqat deoband firqe ko represent ker raheyn hen is liye khuch aqal keren or khuda k khof keren...ab ap ye sabit keren k namaz e ghosia hazrat ghos pak k liye perhi jati he...?

Link to post
Share on other sites

(bis)

صلوٰۃ غوثیہ

دیوبندی صاحب

اگر یہ شرک ہے تو کیا تمہارے نزدیک امام جلال الدین سیوطی علیہ الرحمہ، حضرت شیخ ملا علی قاری حنفی علیہ الرحمہ ، شیخ نورالدین ابی الحسن علی بن  یوسف شطنوبی شافعی علیہ الرحمہ بھی مشرک ہیں؟ کیونکہ انہوں نے یہی صلوٰۃ غوثیہ کی فضیلت لکھی ہے۔

ٹاپک آپ بدلتے ہیں یا ہم ؟ یہ صلوٰۃ غوثیہ کا ٹاپک ہم نے شروع کیا ہے یا آپ نے؟

آپ نے ابھی تک تھانوی کے شعر کی  تھانوی کے دوسرے عقیدہ سے تطبیق نہیں اگر تطبیق نہیں کرتے ہو تو تھانوی تمہارے نزدیک مشرک ہے۔ ، اس بارے میں آپ کی بولتی بند ہے۔

اگر آپ غائب ہوں تو موت آجائے،اور دنیا تنگ وتاریک ہوجائے۔

 

1.jpg

Image1.jpg

Image2.jpg

slat e gosiya 1.jpg

slat e gosiya 2.jpg

behjatul israr 1.jpg

behjatul israr 2.jpg

untitled 0.jpg

untitled 1.jpg

untitled 2.jpg

  • Like 1
Link to post
Share on other sites

(bis)

شیخ  محقق عبدالحق محدث دہلوی علیہ الرحمہ کی بھی سن لو

لیکن دیوبندیوں کا مسلمان بزرگوں سے کیا تعلق یہ تو دیوبندی ملاؤں کے اندھی تقلید میں 
اندھے ہوچکے ہیں۔

ایک دیوبندی مولوی نے شیخ محقق کی اسی کتاب اخبار الاخیار کا اُردو ترجمہ کیا ، لیکن ترجمہ میں یہ خیانت کی کہ عبارت کا ترجمہ کرتے ہوئے لکھا ایک روایت میں ہے کہ گیارہ قدم عراق کی جانب چل کر میرا نام لے کر دُعا مانگے، لیکن یہ روایت ثابت نہیں ہے۔

میں نے اصل فارسی نسخہ کا عکس بھی دے دیا ہے اُس میں کہیں بھی یہ بات نہیں لکھی کہ یہ روایت ثابت نہیں، جس کسی نے لکھا ہے تو دیوبندی مولوی کوچاہئے کہ اس کا حوالہ دے، اگر انتالیس سو نو ہی حوالہ دیدے تو بھی ہماری معلومات میں اضافہ ہوجائے گا۔

اگر فیضان سنت والے اس نماز نفل کو لکھنے میں مجرم ہیں تو کیا شیخ محقق علیہ الرحمہ اور دیوبندی مولوی جو دیوبندی دارالعلوم کراچی کا استاد ہے وہ بھی مجرم ہے ؟
 

akhyae  1.jpg

akhyae  2.jpg

akhbar 1.jpg

akhbar 2.jpg

Link to post
Share on other sites

مشکوٰۃ شریف میں بحوالہ ابوداؤد شریف حضرت ابوہریرہ ؓ کامبارک فرمان درج ہے:۔


 


مَنْ يَضْمَنُ لِي مِنْكُمْ أَنْ يُصَلِّيَ لِي فِي مَسْجِدِ الْعَشَّارِ رَكْعَتَيْنِ أَوْ أَرْبَعًا


وَيَقُولُ هَذِهِ لِأَبِي هُرَيْرَةَ؟


تم میں سے کون ہے جومجھے ضمانت دے کہ مسجدعشار میں دوچاررکعتیں نماز پڑھ کر کہے کہ


یہ(نماز) ابوہریرہؓ کے لئے ہے۔(یعنی اس کاثواب ابوہریرہ ؓکے لئے ہے)۔


 


 


 کسی بزرگ کی قبرکی طرف چندقدم چلنے سے اُدھرکی روح متوجہ ہوجاتی ہے چنانچہ


مشہورہے کہ


عورت جب ناجائز   زیارت ِقبرکوجاتی ہے تو


وہ گھرسے نکلتی ہے کہ میت اُس پرلعنت شروع کردیتی ہے۔


اربعین شاہ اسحاق دہلوی۔


 


 


اس کے بعدتوسل کی درخواست ہے جس سے دیوبندی بھی انکارنہیں کرسکتے۔


 


صلوٰۃ الغوثیہ کے یہی تین اجزاء ہیں۔


Edited by Saeedi
Link to post
Share on other sites

 

 

 

 

 

 

 

 

Salam,

 

Khalil Rana Sahab aap do din daharay posts laga kar farar hojatay ho.Meray in sawalo kay jawab deni ki koshish karay:

 

1.) Pehlay to mujhay kisi ghair deobandi aur ghair barelwi muffasir , muhadith ya fuqaha ki koi kitaab dekhai jis may Mulla Ali Qari Rehmaullah ki kitaab ka zikr ho.

 

2. ) Doosri baat yay keh may nay sunna hay kay Imam Jalalludin sayyuti Rehmaullah ki kitaab  al-Rahma fi al-tibb wa al-hikma jo unki taraf mansoob hay , wo jali hay.Pehlay to aap yay sabit karay kay yay waqai Imam Sahab ki kitaab hay kyon kay shayd aap nay baki kitaab nahi parhi kay us may kya kya likha hay.(ghair barelwi aur ghair deobandi zarai say).

 

3.) Agar maan bhi lia jai kay yay dono kitabay asli hi hay , to phir in may aur "Faizan e Sunnat" ki kitaab wali ibarto may zameen asmaan ka farq hay.In kitabo may kahi bhi istigasa nahi.Mujhay iteraaz istigasa pay hay.

 

4.) Shah Abdul Haaq Muhadith Dehlwi Rehmaullah ki kitaab may kahi bhi istigasa nahi.AAP nay jo ibaraat peesh ki hay , us may sirf waseelah hay , nay kay istigasa jaisay "Faizan e Sunnat " may hay.

 

5. ) Yay namaz to khud Sheikh Abdul Qadir Jillani Rehmaullah ki akhri wasiyat kay bar aqs hay :Mulahiza ho:

 

post-15519-0-10426100-1398246823_thumb.png

post-15519-0-61979100-1398246840_thumb.png

 

Aur yay bhi:

 

“ولا تخف أحدًا ولا ترجه، وكِل الحوائج كلها إلى الله عز وجل، واطلبها منه، ولا تثق بأخد سوى الله عزوجل ولا تعتمد إلا عليه سبحانه التوحيد التوحيد التوحيد وجماع الكل التوحيد”

 

Kisi se mat darna aur kisi se ummede na rakhna, aur apni tamam zarurate sirf Allah se kahna, apni zarurate usse hi mangna…aur kisi par Inhisaar(depend)na hona Allah ke siwa atTawheed, atTawheed, atTawheed.

[Fath al-Rabbani page 373]  .

 

Wasallam.

Link to post
Share on other sites

 

مشکوٰۃ شریف میں بحوالہ ابوداؤد شریف حضرت ابوہریرہ ؓ کامبارک فرمان درج ہے:۔

 

مَنْ يَضْمَنُ لِي مِنْكُمْ أَنْ يُصَلِّيَ لِي فِي مَسْجِدِ الْعَشَّارِ رَكْعَتَيْنِ أَوْ أَرْبَعًا

وَيَقُولُ هَذِهِ لِأَبِي هُرَيْرَةَ؟

تم میں سے کون ہے جومجھے ضمانت دے کہ مسجدعشار میں دوچاررکعتیں نماز پڑھ کر کہے کہ

یہ(نماز) ابوہریرہؓ کے لئے ہے۔(یعنی اس کاثواب ابوہریرہ ؓکے لئے ہے)۔

 

 

 کسی بزرگ کی قبرکی طرف چندقدم چلنے سے اُدھرکی روح متوجہ ہوجاتی ہے چنانچہ

مشہورہے کہ

عورت جب ناجائز   زیارت ِقبرکوجاتی ہے تو

وہ گھرسے نکلتی ہے کہ میت اُس پرلعنت شروع کردیتی ہے۔

اربعین شاہ اسحاق دہلوی۔

 

 

اس کے بعدتوسل کی درخواست ہے جس سے دیوبندی بھی انکارنہیں کرسکتے۔

 

صلوٰۃ الغوثیہ کے یہی تین اجزاء ہیں۔

 

Salam,

 

AAP to akhir sharam ani chahiyay adhi hadith aur man gharat tarjamay kartay kartay:Mulahiza ho:

 

                                                                                                            

 
                                                                                       كتاب الملاحم

 

                                                                                                               باب فِي ذِكْرِالْبَصْرَةِ

 

حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنِي إِبْرَاهِيمُ بْنُ صَالِحِ بْنِ دِرْهَمٍ، قَالَ سَمِعْتُ أَبِي يَقُولُ، انْطَلَقْنَا حَاجِّينَ فَإِذَا رَجُلٌ فَقَالَ لَنَا إِلَى جَنْبِكُمْ قَرْيَةٌ يُقَالُ لَهَا الأُبُلَّةُ قُلْنَا نَعَمْ ‏.‏ قَالَ مَنْ يَضْمَنُ لِي مِنْكُمْ أَنْ يُصَلِّيَ لِي فِي مَسْجِدِ الْعَشَّارِ رَكْعَتَيْنِ أَوْ أَرْبَعًا وَيَقُولَ هَذِهِ لأَبِي هُرَيْرَةَ سَمِعْتُ خَلِيلِي أَبَا الْقَاسِمِ صلى الله عليه وسلم يَقُولُ ‏ "‏ إِنَّ اللَّهَ يَبْعَثُ مِنْ مَسْجِدِ الْعَشَّارِ يَوْمَ الْقِيَامَةِ شُهَدَاءَ لاَ يَقُومُ مَعَ شُهَدَاءِ بَدْرٍ غَيْرُهُمْ ‏"‏ ‏.‏ قَالَ أَبُو دَاوُدَ هَذَا الْمَسْجِدُ مِمَّا يَلِي النَّهْرَ ‏.‏
Ab zara mujhay batayay kay is hadith ka is topic say kya taluq.Kuch to aqal say kaam lay.
 
Wasallam.
Edited by Haq3909
Link to post
Share on other sites

 

Haq3909, on 23 Apr 2014 - 03:10 AM, said:
Salam,

AAP to akhir sharam ani chahiyay adhi hadith aur man gharat tarjamay kartay kartay:Mulahiza ho:

جناب میں نے پوری  سے نہیں فقط حضرت ابوہریرہؓ کے قول سے استدلال کیاہے۔اورترجمہ میں کیا غلط ہے؟ اس پر آپ نے کچھ نہیں لکھا۔کیاشرم وغیرت کے الفاط لکھتے وقت آپ .... ہوگئے تھے یاہمیشہ سے ہی ایسے ہی ہیں؟

   باب فِي ذِكْرِالْبَصْرَةِ

 

حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنِي إِبْرَاهِيمُ بْنُ صَالِحِ بْنِ دِرْهَمٍ، قَالَ سَمِعْتُ أَبِي يَقُولُ، انْطَلَقْنَا حَاجِّينَ فَإِذَا رَجُلٌ فَقَالَ لَنَا إِلَى جَنْبِكُمْ قَرْيَةٌ يُقَالُ لَهَا الأُبُلَّةُ قُلْنَا نَعَمْ ‏.‏ قَالَ مَنْ يَضْمَنُ لِي مِنْكُمْ أَنْ يُصَلِّيَ لِي فِي مَسْجِدِ الْعَشَّارِ رَكْعَتَيْنِ أَوْ أَرْبَعًا وَيَقُولَ هَذِهِ لأَبِي هُرَيْرَةَ سَمِعْتُ خَلِيلِي أَبَا الْقَاسِمِ صلى الله عليه وسلم يَقُولُ ‏ "‏ إِنَّ اللَّهَ يَبْعَثُ مِنْ مَسْجِدِ الْعَشَّارِ يَوْمَ الْقِيَامَةِ شُهَدَاءَ لاَ يَقُومُ مَعَ شُهَدَاءِ بَدْرٍ غَيْرُهُمْ ‏"‏ ‏.‏ قَالَ أَبُو دَاوُدَ هَذَا الْمَسْجِدُ مِمَّا يَلِي النَّهْرَ ‏.

اس حدیث پاک میں سے خط کشیدہ الفاظ حضرت ابوہریرہؓ کامکمل قول ہیں۔اس کو آدھی حدیث کہناجناب کی نوازش ہے۔

 

Ab zara mujhay batayay kay is hadith ka is topic say kya taluq.Kuch to aqal say kaam lay.
 
Wasallam.

اگردماغ میں دیوبندنہ ہوتاتوتجھے سمجھ آجاتاکہ نسبت صلوٰۃ جس طرح حضرت ابوہریرہ کی طرف درست ہے ایسے ہی کسی اورامتی کی طرف بھی درست ہے۔اس حدیث سے یہی استدلال مقصودتھاجوجناب کوجلدبازی کی وجہ سے سمجھ نہ آیا۔

 

Edited by Saeedi
Link to post
Share on other sites

3909   kahan tak suno gay kahan tak suna oon. aap nay likha k ham qabar par sajda karnay ko shirk naheen samjhtay,  ko e saboot.

 

hamara aqeeda ya hay,

 

qabar ko sajda taazeemee karna haram

 

qabar walay ko maabood samajh kar sajda karna shirk

 

ab aap bata ain, kahan ghalti hay.

Link to post
Share on other sites

 

 

Salam alayqum,

 

Moteram Khalil baee in logoon kee aqaloon par tallay hen. Allah ta'ala aap kay darjaat buland karay aur aap ko aap kee mehnat ka behtreen sila deh ameen. Is ko istighatha ka lafz nahin mila ... yeh lafz dekh raha heh kay istighatha ka lafz nahin is leyeh keh raha heh istighatha ka saboot nahin. In ko kufr ki maut hee lafz martay hen yeh lafz dekhtay hen aur mafoom nahin, lafz nahin toh mafoom be nahin, yeh in ka asool heh.

Edited by MuhammedAli
Link to post
Share on other sites

Salam alayqum,

 

. Allah ta'ala aap kay darjaat buland karay aur aap ko aap kee mehnat ka behtreen sila deh ameen.

آمین، ثمّہ آمین

واقعی اِن کی عقلوں پر تالے ہی نہیں دلوں پر مہر بھی لگ چکی ہے اور آنکھوں پر تو ہمیشہ سے تعصب کی کالی عینک ہے جس سے ان کو صرف دیوبندی ہی صحیح نظر آتے ہیں باقی سب غلط۔۔۔ یہی ٹریننگ ہے یہودیوں کی اِن کو ورنہ اگر ایمان نام کی کوئی بھی چیز ذرّہ برابر بھی اِن کے پاس ہوتی تو یہ اسلام کی خاطر اپنے اور پرائے کے لیئے الگ الگ معیارات نہ رکھتے۔

جزاک اللہ

Link to post
Share on other sites

(bis)

Salam,

 

1. ) Sab say pehli baat to yay hay kay akhir aap kab tak Touheed Sahab ki posts ko idhr copy paste kartay jai gay?Akhir eik din woh bhi khatam hojai gee.Khud apna dimagh istimal aur tehqeeq karni ki koshish karo.

 

2.) Agar librario may mojood honay say Kitaab asli sabit hoti hay , to phir janab , Sheikh Abdul Qadir Jillani Rehmaullah ki kitaab ,"Ghunyatut Talibeen" jo kay taqreeban har library may mojood hay , ussay barelwi hazraat Jali mantay hay.Ab aap jo bhi jawab peesh karay , wahi jawab hamari taraf say bhi kabool karlay.

 

Doosri baat yay keh , kisi Deobandi , Barelwi , Ahle Hadeeth , Wahabi ya Shia Alim kay kenay say koi kitaab sachi na ho jati.

 

Thisri baat yay kay Mulla Ali Qari Rehmaullah ki baki kitaabo may bhi unka yay aqeeda nahi.Mulahiza ho:

 

ويعتمد فى جمهور الامور عليه اى ولا يسأل غيره لان غيره غير قادر على العطأ والمنع ودفع الضرر وجلب النفع فانهم لا يملكون موتا ولا حياتا ولا نشور

(Sharah Mishkaat)

 

post-15519-0-63252300-1398445627_thumb.png

post-15519-0-71027300-1398445642_thumb.png

 

Yay to sirf eik hawala hay.Balkay eik naya thread banay aur In Sha' Allah may aap ko dikhtata ho kay Mulla Ali Qari Rehmaullah to aap kay Hazir O Nazir , Ilm Ghayb , Noor aur Mukhtar Kull kay concept kay khilaf hay.

 

 

Aur aap nay abhi tak Imam Jallaluddin Sayyuti Rehmaullah ki kitaab ki tasdeeq nahi ki?Zara Imam Sahab ki tafaseer parho to apko unka aqeeda bhi pata chal jai ga.Agar aap farmaish karay, to may apko unk mustanad kitabo say nka aqeeda dikhao?

 

3.)AAP nay jo AL-Hafiz Al-Subki Rehmaullah ka hawala jo diya , to is ka jawab may nay pehlay be eik thread may diya jis ka jawab abhi tak mujhay nahi mila.Un ka istigasa ka matlab bhi dekh lay:

 

" اعلم أنه يجوز ويحسن التوسل والاستعانة والتشفع بالنبي صلى الله عليه وسلم إلى ربه سبحانه وتعالى ، وجواز ذلك وحسنه من الأمور المعلومة لكل ذي دين المعروفة من فعل الأنبياء والمرسلين وسير السلف الصالحين والعلماء والعوام من المسلمين ، ولم ينكر أحد ذلك من أهل الأديان ولا سمع به في زمن من الأزمان حتى جاء ابن تيمية فتكلم في ذلك بكلام يلبس فيه على الضعفاء الأغمار، وابتدع ما لم يسبق إليه في سائر الأعصار. . . ".اهـ.
 
أن تعلقهم بالسبكي على أن " التوسل والاستغاثة بمعنى واحد"
مع تجاهل القرآن { فَلَا تَدْعُوا مَعَ اللَّهِ أَحَدًا } والحديث "إذا سألت فاسأل الله " ليس من صفات المسلم.
ولقد كان السبكي يقصد بـ ( الاستغاثة بالنبي ) : الاستغاثة إلى الله بالنبي صلى الله عليه وسلم
ولذلك قال " اعلم أنه يجوز التوسل والاستغاثة والتشفع بالنبي إلى ربه " .
ثم استدل على ذلك بحديث "يا رب أسألك بحق محمد"
انظر - شفاء السقام في زيارة خير الأنام 160 - 161 دار الآفاق . والحديث موضوع كما في تعقيب الذهبي على مستدرك الحاكم 2 / 615 .
 
ثم قال السبكي:
" ولسنا في ذلك سائلين غير الله تعالى ولا داعين إلا إياه ، فالمسئول في هذه الدعوات كلها هو الله وحده لا شريك له ، والمسئول به مختلف ، ولم يوجب ذلك إشراكاً ولا سؤال غير الله ، كذلك السؤال بالنبي صلى الله عليه وسلم ليس سؤالاً للنبي صلى الله عليه وسلم بل سؤال لله به ".
 
وضرب لذلك مثلا أن تقول
" استغثت الله بالنبي صلى الله عليه وسلم كما يقول : سألت الله بالنبي صلى الله عليه وسلم" (انظر شفاء السقام 174-176-)
 
وهذا يفيد : أن سؤال غير الله شرك عند السبكي .
وأن الاستغاثة بالنبي معناها عنده : الاستغاثة بالله بالنبي صلى الله عليه وسلم
ولكنه عادة يختصر العبارة ويقول : ( الاستغاثة بالنبي ) . ولذلك قال
" وقد يحذف المفعول به ( أي الله المستغاث ) ويقال : استغثت بالنبي صلى الله عليه وسلم "
 
يعني مختصر مفيد.
يقول السبكي فيما معناه.. لما الواحد بيقول لك ( انا بستغيث بالنبي ) يعني قصده أنه يستغيث بالله .. بالنبي ...
ولكن ليس معناه أنه يقول ( يارسول الله اشفني وارزقني وانقذني من الغرق ) كما يحاول جهلة المتصوفة أن يقرروه.. بأن هذا هو مقصود السبكي.
 
لذلك يقول السبكي (فتاوىيه 1/13) تعليقا على هذه الآية ( أدعوني أستجب لكم)
بأن هذه الآية تفيد أنه لا يستعان غير الله.
وأكد أن تقديم المعمول يفيد الاختصاص
وتجد هذا أيضا في طبقات السبكي.
 
وهذا السبكي الابن ينقل عن القماح شعراً يقول فيه
فاضرع إلى الله الكريم ولا تسل بشراً فليس سواه كاشـف الضر
انظر (طبقات السبكي 9 / 92 محققة)

 

To kya ab koi dawa karsakta hay Taqi ad-Din as-Subki (rahimahullah) nay "Ya Fulan may tujh say rizk/madad mangta hu" ko jaiz karar diya?NAHI.!

 

4. ) Jaha tak Shah Abdul Haq Muhadith Dehlwi Rehmaullah ka taluq hay to zara yay mulhaiza karay:

 

tawassul1.jpg

 

tawassul2.jpg

tawassul3.jpg

 

 

Aur aap kay ghar say bhi yahi gawahi:

 

post-15519-0-29568900-1398446985_thumb.png

 

 

Kyon kalajay ko ab thandak pohnchi?Hum bhi to yahi kehtay hay:

 

5.)Pata nahi aap kyon Sheikh abdul qadir Jillani Rehmaullah kay aqeeday ko chupa rahay hay:Mulahiza ho:

 

“Pairwi kare aur Ittiba kare aur nai chize deen me ijaad na kare aur Ikhtilaf na kare, Pairwi kare aur na-farmani na kare. Allah ek hai qubul kare aur usse muh na mode. Allah se madad mange aur kisi aur se madad na mange. Us par bharosa kare aur usi par Itmaad kare aur kisi aur par bharosa na kare."
 (al-Fath ur-Rabbaanee (pg.151).
 
Pure MAkhlook usi par Inhisaar(depend) hai aur laachaar hai uske binah. Tumhe koi fayda ya nuksan nahi pohcha sakta.
(Fath ur-Rabbaanee (pg.89).
 
SHEIKH ABDUL QADIR JILANI (raheemullah) ne aur wazahat kar ke farmaya:
 
يا من يشكو إلى الخلق مصائبه إيش ينفعك شكواك إلى الخلق لا ينفعونك ولا يضرونك ، وإذا اعتمدت عليهم وأشركت في باب الحق يبعدونك وفي سخطه يوقعونك وعنه يحجبونك أنت يا جاهل تدعي العلم من جملة جهلك بشكواك إلى الخلق
 
Ae wo log jo apni pareshanio me apne hi jaise makhlook se shikayate karte hai.. Wo Tumhe koi fayda nahi dete hai aur na hi tumse koi nuksaan ko lete hai. Aur agar tum unse tobah karo to tum Allah ke sath shareek karte ho un muamlat me jo Allah ke hai. Wo Allah se tumhe dur kar denge. Wo apko fek denge. Ae Jahilo, Ilm hone ka dawah karne walo. Pareshanio se chutkara ke liye unse madad mangte ho jo tumhare hi tarha makhlook hai.
[Fath al-Rabbani page 117-118]
 
Unhone ye bhi kaha
 
 ويلك! ماتستحي تطلب من غير الله عزوجل وهو أقرب إليك من غيره
 
Lanat ho tumpar. Kya tumhe sharm tak nahi aati Allah ke siwa auro se apni zarurato ko mangne ke liye. Jab ke wo tumse auro se zyada nazdeek hai.
 
[Fath al-Rabbani page 159]
 
 aur Unhone ye kaha
 
لا تدع مع الله أحدا كما قال الله عزوجل وَأَنَّ الْمَسَـجِدَ لِلَّهِ فَلاَ تَدْعُواْ مَعَ اللَّهِ أَحَداً
 
Allah ke siwa kisi aur ko mat pukaro jaise ki MAsjid sirf Allah ke liye hoti hai, isi liye Allah ke sath kisi aur ko mat pukaro. 
[Fath al-Rabbani page 184]
 
 
Unhone Kaha
 
لاتسئل الخلق شئياً فانهم عجزة فقراء لايملكون لانفسهم ولالغيرهم ضراً ولا نفعا
 
MAkhluq se kuch bhi mat mango, unke pas takat nahi hai aur khud zaruratmand hai. Wo apne liye ya kisi ke liye koi fayda ya nuksan pohchane ka koi ikhtiyar nahi rakhte .
 
[Fath al-Rabbani, majlis # 50 p.209]

 

 

6. ) Aur jaha tak Hadeeth ka taluq hay jo aap nay peesh ki to iski do wazahata hay:

 

Pehli to yay kay yay hadeeth daeef hay.

 

 

Ibn e Hajar asqalani nay at-Taqreeb may kaha
 
ابن الفراسي عن النبي - صلى الله عليه وسلم - وقيل عن أبيه عن النبي - صلى الله عليه وسلم - لا يعرف اسمه
 
PQAAAA5UAIcIKd97d6Xp-IcH6xNedZm6rgjMD2L1

 

 

 

 

 

 Doosri baat yay kay aap is hadith say Istigasa ka istidlal kesay kar rahay hay?Khud Muhadditheen (Imam Abu Dawood and Nisai Rehmaullah) nay is  hadeeth ko Kitab az-Zakat may shamil kiya.Aur Abu Daud may iska baab hay:

 

باب فِي الاِسْتِعْفَافِ

Jee janab is baab kay naam say hi hadith ka matlab nikal lay.

 

Saat hi saath apko 3 hadeethay peechay yay wali hadeeth milay gi.

 

حَدَّثَنَا عُبَيْدُ اللَّهِ بْنُ مُعَاذٍ، حَدَّثَنَا أَبِي، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ عَاصِمٍ، عَنْ أَبِي الْعَالِيَةِ، عَنْ ثَوْبَانَ، قَالَ وَكَانَ ثَوْبَانُ مَوْلَى رَسُولِ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم ‏ "‏ مَنْ تَكَفَّلَ لِي أَنْ لاَ يَسْأَلَ النَّاسَ شَيْئًا وَأَتَكَفَّلَ لَهُ بِالْجَنَّةِ ‏"‏ ‏.‏ فَقَالَ ثَوْبَانُ أَنَا ‏.‏ فَكَانَ لاَ يَسْأَلُ أَحَدًا شَيْئًا ‏.‏

 

Jee to ab kya huwa.Agar us hadith ka wohi matlaab tha jo aap lay rahay thay , to phir is hadith ka kya matlaab hay?
 
 
Third baat yay kay , Huzoor  (saw) nay awal to sawal karnay say mana kiya aur sirf La chari may ijazat dee.Aur yaha baat bhi dunya ki zindagi may zakat leni ki horahi hay.
 
Issi hadith say pehli wali hadeeth bhi mulahiza ho:
 
 كتاب الزكاة            
باب فِي الاِسْتِعْفَافِ
 
 
 

صحيح   (الألباني)

 

حَدَّثَنَا مُسَدَّدٌ، حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ دَاوُدَ، ح حَدَّثَنَا عَبْدُ الْمَلِكِ بْنُ حَبِيبٍ أَبُو مَرْوَانَ، حَدَّثَنَا ابْنُ الْمُبَارَكِ، - وَهَذَا حَدِيثُهُ - عَنْ بَشِيرِ بْنِ سَلْمَانَ، عَنْ سَيَّارٍ أَبِي حَمْزَةَ، عَنْ طَارِقٍ، عَنِ ابْنِ مَسْعُودٍ، قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم ‏ "‏ مَنْ أَصَابَتْهُ فَاقَةٌ فَأَنْزَلَهَا بِالنَّاسِ لَمْ تُسَدَّ فَاقَتُهُ وَمَنْ أَنْزَلَهَا بِاللَّهِ أَوْشَكَ اللَّهُ لَهُ بِالْغِنَى إِمَّا بِمَوْتٍ عَاجِلٍ أَوْ غِنًى عَاجِلٍ ‏"‏ ‏.‏

 

 

Is hadeeth say bilkul apka dawa rad hogaya.

 

Abhi bhi waqt hay , apna aqeeda sahi karlay.

 

 

Wasallam.

Edited by Haq3909
Link to post
Share on other sites

جن کی عقل میں دیوبند ہو اُن کو بات کی واقعی سمجھ نہیں آتی۔ ہم غوث پاک کی کتاب کو تحریف شدہ یا جعلی مانتے ہیں تو بلا دلیل نہیں کہتے بلکہ حوالہ دیتے ہیں (شیخ عبدالحق محدث دہلوی، امام ابن حجر مکی وغیرہ) مگر تم کیا کر رہے ہو؟ صاف صاف کتاب کو جعلی کہہ رہے ہو بلا دلیل۔ تمہیں جو لسٹ فراہم کی ہے۔ کسی مستند عالم کی کتاب سے دکھائو یہ کتاب ملا علی قاری علیہ الرحمہ کی نہیں۔ غلط منسوب ہے یا کسی نے تحریف کی ہے۔ دوسرا امام جلال الدین سیوطی علیہ الرحمہ کی کتاب کو بھی کسی مستند حوالے سے ثابت کرو کہ یہ جعلی ہے وغیرہ۔ یہ بچوں جیسی باتیں مت کرو ۔


 


اور  پہلے تم نے کہا کہ استغا  ثہ نہیں  ہے،توسل ہے اور جب بات بگڑتی نظر آئی تو  نیا کاپی پیسٹ۔


شرم تم کو مگر نہیں آتی


  ہماری بھی استعانت سے مراد توسل ہی ہوتا ہے۔ استعانت حقیقی صرف اللہ تعالی ہی کرتا ہے۔ اور جس کو اللہ طاقت دے۔ حق وہابی صاحب، خوامخواہ شرک کے فتوے مت لگائو اور پہلے اصلی ا ہلسنت کا عقیدہ جانو۔ دونمبرے وہابی جو تمہیں غلط پٹیاں پڑھاتے ہیں اور تم یہاں کاپی پیسٹ کا کام سر انجام دیتے ہو۔ اس سے توبہ کر لو۔


Edited by Kilk-e-Raza
Link to post
Share on other sites

انتالیس سو نو صاحب


بات اَب اپنے نقطہ انجام کو پہنچ گئی ہے، اَب آپ کا بحث کرنابحث  برائے بحث ہے۔


غنیۃ الطالبین کا حضور غوث پاک رضی اللہ عنہ کی طرف منسوب ہونا علماء کے اقوال سے ثابت ہے ، آپ کے علم میں نہ ہو تو ہم کیا کرسکتے ہیں؟آپ کسی مستند حوالہ سے نزھۃ الخاطر الفاتر فی مناقب شیخ عبدالقادر کو منسوب ہونا یا جعلی ہونا ثابت کریں، اگر مگر اور چونکہ چنانچہ نہ کریں۔


اس کتاب سے صلوٰۃ غوثیہ اور استغاثہ ثابت ہے۔


Link to post
Share on other sites

 

انتالیس سو نو صاحب

بات اَب اپنے نقطہ انجام کو پہنچ گئی ہے، اَب آپ کا بحث کرنابحث  برائے بحث ہے۔

غنیۃ الطالبین کا حضور غوث پاک رضی اللہ عنہ کی طرف منسوب ہونا علماء کے اقوال سے ثابت ہے ، آپ کے علم میں نہ ہو تو ہم کیا کرسکتے ہیں؟آپ کسی مستند حوالہ سے نزھۃ الخاطر الفاتر فی مناقب شیخ عبدالقادر کو منسوب ہونا یا جعلی ہونا ثابت کریں، اگر مگر اور چونکہ چنانچہ نہ کریں۔

اس کتاب سے صلوٰۃ غوثیہ اور استغاثہ ثابت ہے۔

 

Salam,

 

 

1.) May nay kab kaha kay jali hay.May nay to kaha tha kay Kisi Jayad Muffasir , Faqih ya Mufasir ki kitab say Mulla Ali Qari Rehmaullah ki kitaab ka zikr ya hawala dikha do jo aap nay nahi kiya balkay ulta mujhay Dubai say chapnay wali unki Kutb Fehrist dikha dee.Aur yay bhi yaad rakhay , kay jab koi shaks koi kitab peesh karta hay , to yay us ki zimay hay kay us kitab ko sacha sabit karay aur na kay mukhalif ko kahay kay tum is kitab ka jali hona sabit karo.Yay to is tarha ki baat hay kay Kal ko may agar koi kitaab likh kar Khalil Rana Sahab ki taraf mansoob kardo , aur phir kaho kay sabit karo kay yay Khalil Rana Sahab ki kitaab nahi?To kya koi sabit karsakay ga?Nahi na.

 

2.) Doosri baat yeh kay kya  Mulla Ali Qari Rehmaullah nay yay namaz khud parhi? 

 

3. ) Kya AAP  (saw) ya Sahaba Karam  (r-anha)  nay yay Namaz ada ki?Kya yay fiqhi masla nahi?Kya kisi Khulafa e Rashideen nay yay namaz ada ki?Aima Arab nay?Taba Tabeein nay?Kitnay hanafi fiqh ki kitabo may is namaz ka zikr hay?Zara bari bari mujhay hawalay day.

 

4. ) aap nay meray upar walay posts ka koi jawab nahi diya?Kyon?

 

Wasallam.

Link to post
Share on other sites

ilmoon bus kareen o yaar.  haq3909    ab bus karo . ab bhee hidyat naheen to kabhee naheen.   main na maanoon yaar wali baat ho gaee.

 

behas karna fazool.

 

hamaray aqeeday  bahut puraanay hain. 1857 k baad k naheen.

 

akbar mughle azam hind baitay k liee paidal rajihistaan main chal kar hazrat saleem chisti  ya  hazrat khawja gharib nawaaz kay mazaar par gia tha to baita paida huaa jo  shehansha jahangee bana.

 

kia wo brailvee tha.   hamayun ka maqbra abhee tak moujood hay.

 

hazrat imam bukhari  ka mazar abhee tak moujood hay aur log jaatay hain. kion  wo brailvee hain.

 

ham brailvee in old logoon  ko follow kartay hain.  misar main hazrat ahmad badvi kay mazar rozana 3/4 lakh log aatay hain. ya kaun hain.  kia brailvee ?

 

aap he apni adaoon pay zara ghour karain,ham agar araz karain gay to shikyat ho gee.

Link to post
Share on other sites

Mian Muhammad Baksh (rehmatullah alayhi) Afif a Khari Shareef, nay khoob farmaya heh. Jin ahbab ko thori punjabi aati hogi un kay leyeh;

Aamaan be-ikhlasan ander khasan dee gal karni,
Mithi kheer paka Muhammad kutyan aggey dharni.

Baqi aap khud samajdar hen ishara samaj gahay hoon gay.

Forum meh behas o mubahisa kay kuch rules nahin hen, forum kay admin aur moderators say guzarish heh kay chand rules banahen jin say mubahisoon ka hasil faida mand ho. Kabi ek mozoo say idhar, udhar say idhar, joh pasand aya us par jawab aur jis par pans gaya us ko chor deeya.

Link to post
Share on other sites

انتالیس سو نو صاحب


میں نے پہلے بھی لکھا کہ


بات اَب اپنے نقطہ انجام کو پہنچ گئی ہے، اَب آپ کا بحث کرنابحث  برائے بحث ہے۔


غنیۃ الطالبین کا حضور غوث پاک رضی اللہ عنہ کی طرف منسوب ہونا علماء کے اقوال سے ثابت ہے ، آپ کے علم میں نہ ہو تو ہم کیا کرسکتے ہیں؟ہم نے اس بات کا ثبوت دے دیا ہے کہ کتاب نزھۃ الخاطر شیخ ملا علی قاری کی تصنیف ہے، آپ نے کہا جس کا خلاصہ یہ ہے کہ اس کتاب کا ذکر کسی مفسر یا محدث یا فقیہہ نے اپنی کسی تصنیف میں نہیں کیا، آپ کا حق تھا کہ اس کے ثبوت میں مفسرین، محدثین اور فقہاء کی کتابوں سے ملا علی قاری کی تصانیف کی فہرست دیتے یا اِاس کی نشان دہی کرتے کہ یہ دیکھو ملا علی قاری کی فہرست کتب ، اس میں اس کتاب کا نام کہاں ہے؟ لیکن اس معاملہ میں آپ دلیل دینے سے خالی ہیں ،دیوبندی صا حب سنئے ! مفسرین ،محدثین اور فقہاء کسی مصنف کی فہرست کتب نہیں دیتے ، کہیں کسی کتاب کا ضمناً ذکر آجائے تو وہ اس  کانام لکھتے ہیں، ورنہ یہ کام مؤرخین فہارس الکتب والادلۃ کا ہے ، مشہور مورخ اسماعیل پاشا نے بھی اپنی تصنیف ہدیۃ العارفین میں ملا علی قاری کی کتب میں اس کا ذکر کیا ہے  ، آپ نے چونکہ نہ ماننے کا ایک ذہن بنا لیا ہے ، اس لئے آپ اپنی دیوبندی عادت سے مجبور ہیں کہ کچھ بھی ہوجائے صحیح بات کو ماننا نہیں ، آپ اس کتاب کو منسوب مانتے ہیں تو اس دعویٰ کی دلیل بھی دیں، لیکن آپ زبردستی ہم سے منوانا چاہتے ہیں کہ آپ اس کو بغیر کسی ثبوت کے منسوب مانو، کیا بات ہے دیوبندی منطق کی ، آپ بغیر دلیل اپنی بات پرضداور ڈھیٹ پن سے ایسے ڈٹے ہوئے ہیں جیسا کہ ایک ضدی شخص اپنی ضد پر اَڑ گیا کہ کوّا سفید رنگ کا ہوتا ہے، لوگوں نے کہا کہ بھائی کوّے کا رنگ کالا ہوتا ہے ، کہنے لگا نہیں میں  نے نہیں ماننا،میں کہتا ہوں کہ کوّے کا رنگ سفید ہوتا ہے اَب ایسے ہٹ دھرم کو کون منواسکتا ہے کہ کوّے کا رنگ کالا ہوتا ہے۔   آپ کسی مستند حوالہ سے نزھۃ الخاطر الفاتر کومنسوب ہوناہونا ثابت کریں، اگر مگر اور چونکہ چنانچہ نہ کریں، اسی کتاب سے صلوٰۃ غوثیہ اور استغاثہ کی بحث حل ہوجائے گی باقی بحث کی ضرورت ہی نہیں رہے گی۔


 



arfeen 1.jpg

arfeen 3.jpg

arfeen 2.jpg

Edited by Khalil Rana
Link to post
Share on other sites

یہ بهی دیوبندی کی هٹ دهرمی اور منہ ژوری هے کہ ایک نژهه پر اڑ گیا هے. ورنہ کیا اخبار الاخیار اور ژبده الآٹاز معتبر نہین،؟ کیا بہجه الآثار معتبر نہین؟

Link to post
Share on other sites

یہ بهی دیوبندی کی هٹ دهرمی اور منہ ژوری هے کہ ایک نژهه پر اڑ گیا هے. ورنہ کیا اخبار الاخیار اور ژبده الآٹاز معتبر نہین،؟ کیا بہجه الآثار معتبر نہین؟

 

 

 

انتالیس سو نو صاحب

میں نے پہلے بھی لکھا کہ

بات اَب اپنے نقطہ انجام کو پہنچ گئی ہے، اَب آپ کا بحث کرنابحث  برائے بحث ہے۔

غنیۃ الطالبین کا حضور غوث پاک رضی اللہ عنہ کی طرف منسوب ہونا علماء کے اقوال سے ثابت ہے ، آپ کے علم میں نہ ہو تو ہم کیا کرسکتے ہیں؟ہم نے اس بات کا ثبوت دے دیا ہے کہ کتاب نزھۃ الخاطر شیخ ملا علی قاری کی تصنیف ہے، آپ نے کہا جس کا خلاصہ یہ ہے کہ اس کتاب کا ذکر کسی مفسر یا محدث یا فقیہہ نے اپنی کسی تصنیف میں نہیں کیا، آپ کا حق تھا کہ اس کے ثبوت میں مفسرین، محدثین اور فقہاء کی کتابوں سے ملا علی قاری کی تصانیف کی فہرست دیتے یا اِاس کی نشان دہی کرتے کہ یہ دیکھو ملا علی قاری کی فہرست کتب ، اس میں اس کتاب کا نام کہاں ہے؟ لیکن اس معاملہ میں آپ دلیل دینے سے خالی ہیں ،دیوبندی صا حب سنئے ! مفسرین ،محدثین اور فقہاء کسی مصنف کی فہرست کتب نہیں دیتے ، کہیں کسی کتاب کا ضمناً ذکر آجائے تو وہ اس  کانام لکھتے ہیں، ورنہ یہ کام مؤرخین فہارس الکتب والادلۃ کا ہے ، مشہور مورخ اسماعیل پاشا نے بھی اپنی تصنیف ہدیۃ العارفین میں ملا علی قاری کی کتب میں اس کا ذکر کیا ہے  ، آپ نے چونکہ نہ ماننے کا ایک ذہن بنا لیا ہے ، اس لئے آپ اپنی دیوبندی عادت سے مجبور ہیں کہ کچھ بھی ہوجائے صحیح بات کو ماننا نہیں ، آپ اس کتاب کو منسوب مانتے ہیں تو اس دعویٰ کی دلیل بھی دیں، لیکن آپ زبردستی ہم سے منوانا چاہتے ہیں کہ آپ اس کو بغیر کسی ثبوت کے منسوب مانو، کیا بات ہے دیوبندی منطق کی ، آپ بغیر دلیل اپنی بات پرضداور ڈھیٹ پن سے ایسے ڈٹے ہوئے ہیں جیسا کہ ایک ضدی شخص اپنی ضد پر اَڑ گیا کہ کوّا سفید رنگ کا ہوتا ہے، لوگوں نے کہا کہ بھائی کوّے کا رنگ کالا ہوتا ہے ، کہنے لگا نہیں میں  نے نہیں ماننا،میں کہتا ہوں کہ کوّے کا رنگ سفید ہوتا ہے اَب ایسے ہٹ دھرم کو کون منواسکتا ہے کہ کوّے کا رنگ کالا ہوتا ہے۔   آپ کسی مستند حوالہ سے نزھۃ الخاطر الفاتر کومنسوب ہوناہونا ثابت کریں، اگر مگر اور چونکہ چنانچہ نہ کریں، اسی کتاب سے صلوٰۃ غوثیہ اور استغاثہ کی بحث حل ہوجائے گی باقی بحث کی ضرورت ہی نہیں رہے گی۔

 

 

Salam,

 

Mujhay itna bhi zidi na samjhay kay may kisi ki baat hi nahi manta.Chalo agar may Mulla Ali Qari Rahimahullah ki kitaab maan leta ho kay yay sachi hay (leikin in ka aqeeda woh bilkul nahi tha jo aap logo ka hay.Shiekh Abdul Haq Muhadith Dehlwi Rahimahullah bhi istimdad ka haq may hay leikin unkay aur barelwio kay tareeqay may zameen asmaan ka farq hay jo kay guzishta page pay wazih hogaya hay aur Mulla Ali Qari Rahimahullah ka aqeeda bhi in ki mustanad kitabo say bilkul wazih hay.Kisi say bhi aap logo ka aqeeda sabit nahi hota.)

 

May to sirf AAP  (saw) ka tareeqay par hi chalo gay kay unho nay hamay aise koi namaz ka hukm nahi diya aur na hi Sahaba Karam Radiallaho Anhum nay yay namaz parhi.

 

Agar aap log Mulla Ali Qari Rahimahullah say apna aqeeda sabit kar rahay ho , phir aap logo ko Qari Sahab ki baki batay bhi mani hogi.Kya aap log is kay liyay tayar ho?

 

Wasallam.

Edited by Haq3909
Link to post
Share on other sites

Salam,

 

Mujhay itna bhi zidi na samjhay kay may kisi ki baat hi nahi manta.Chalo agar may Mulla Ali Qari Rahimahullah ki kitaab maan leta ho kay yay sachi hay (leikin in ka aqeeda woh bilkul nahi tha jo aap logo ka hay.Shiekh Abdul Haq Muhadith Dehlwi Rahimahullah bhi istimdad ka haq may hay leikin unkay aur barelwio kay tareeqay may zameen asmaan ka farq hay jo kay guzishta page pay wazih hogaya hay aur Mulla Ali Qari Rahimahullah ka aqeeda bhi in ki mustanad kitabo say bilkul wazih hay.Kisi say bhi aap logo ka aqeeda sabit nahi hota.)

 

May to sirf AAP  (saw) ka tareeqay par hi chalo gay kay unho nay hamay aise koi namaz ka hukm nahi diya aur na hi Sahaba Karam Radiallaho Anhum nay yay namaz parhi.

 

Agar aap log Mulla Ali Qari Rahimahullah say apna aqeeda sabit kar rahay ho , phir aap logo ko Qari Sahab ki baki batay bhi mani hogi.Kya aap log is kay liyay tayar ho?

 

Wasallam.

 

یعنی تم اس نماز کو ٹھیک نہیں مانو گے کیونکہ تمہیں اور تمہارے دیوبند کی نئی پیداوار کو قرآن و حدیث کا زیادہ علم ہے۔

ملا علی قاری، امام جلال الدین سیوطی اور دیگر محدثین کو یہ معلوم نہیں تھا کہ نماز غوثیہ سرکار صلی اللہ علیہ وسلم نے تعلیم نہیں دی اور ہمیں صرف آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے طریقے پر ہی چلنا چاہئے۔

Link to post
Share on other sites

Join the conversation

You can post now and register later. If you have an account, sign in now to post with your account.
Note: Your post will require moderator approval before it will be visible.

Guest
Reply to this topic...

×   Pasted as rich text.   Paste as plain text instead

  Only 75 emoji are allowed.

×   Your link has been automatically embedded.   Display as a link instead

×   Your previous content has been restored.   Clear editor

×   You cannot paste images directly. Upload or insert images from URL.

Loading...
  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.

×
×
  • Create New...