Jump to content
IslamiMehfil

حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہ کے قول کی سند


Recommended Posts

الدليل على كون الرسول صلى الله عليه وسلم لا ظلّ لأنّه نور،ولكي لا يدوس على ظلّه أحد:


*أخرج أحمد بن عبد اللَّه الغدافي في جزئه كما في إمتاع الأسماع - (ج 2 / ص 170) قال:أخبرنا عمرو بن أبي عمرو عن محمد بن السائب عن أبي صالح عن ابن عباس رضي اللَّه عنه: لم يكن لرسول اللَّه ظل، ولم يقم مع شمس قط إلا غلب ضوؤء الشمس، ولم يقم مع سراج قط إلا غلب ضوءه على ضوء السراج.


إسناده صحيح


*وأخرجه ابن الجوزي في الوفا بتعريف فضائل المصطفى (ج 1 / ص 301)


تراجم الاسناد:


الأول: عمرو بن أبى عمرو : زرارة بن واقد الكلابى ، أبو محمد النيسابورى ( قرأ القرآن على على بن حمزة الكسائى )


المولد :  160 هـ


الطبقة :  10 : كبارالآخذين عن تبع الأتباع


الوفاة :  238 هـ


روى له :  ( البخاري - مسلم - النسائي )


 


الثاني: محمد بن السائب بن بركة الحجازى المكى


الطبقة :  6  : من الذين عاصروا صغارالتابعين


روى له :  ت س ق  ( الترمذي - النسائي - ابن ماجه )


رتبته عند ابن حجر :  ثقة


رتبته عند الذهبي :  وثقه ابن معين


 


الثالث : ذكوان أبو صالح السمان الزيات المدنى ، مولى جويرية بنت الأحمس الغطفانى ( والد سهيل بن أبى صالح )


الطبقة :  3  : من الوسطى من التابعين


الوفاة :  101 هـ


روى له :  خ م د ت س ق  ( البخاري - مسلم - أبو داود - الترمذي - النسائي - ابن ماجه )


رتبته عند ابن حجر :  ثقة ثبت


رتبته عند الذهبي :  من الأئمة الثقات


وقال الذهبي في سير أعلام النبلاء: أَبُو صَالِحٍ السَّمَّانُ ذَكْوَانُ بنُ عَبْدِ اللهِ (أحتج به أصحاب الستة)


القُدْوَةُ، الحَافِظُ، الحُجَّةُ، ذَكْوَانُ بنُ عَبْدِ اللهِ مَوْلَى أُمِّ المُؤْمِنِيْنَ جُوَيْرِيَةَ الغَطَفَانِيَّةِ.


كَانَ مِنْ كِبَارِ العُلَمَاءِ بِالمَدِيْنَةِ، وَكَانَ يَجْلِبُ الزَّيْتَ وَالسَّمْنَ إِلَى الكُوْفَةِ.


وُلِدَ: فِي خِلاَفَةِ عُمَرَ، وَشَهِدَ - فِيْمَا بَلَغَنَا - يَوْمَ الدَّارِ، وَحَصْرَ عُثْمَانَ.


وَسَمِعَ مِنْ: سَعْدِ بنِ أَبِي وَقَّاصٍ، وَعَائِشَةَ، وَأَبِي هُرَيْرَةَ، وَابْنِ عَبَّاسٍ، وَأَبِي سَعِيْدٍ، وَعَبْدِ اللهِ بنِ عُمَرَ، وَمُعَاوِيَةَ، وَطَائِفَةٍ سِوَاهُم.


وَلاَزَمَ أَبَا هُرَيْرَةَ مُدَّةً.


الرابع: ابن عباس هو ابن عباس رضي الله عنهما.

Link to post
Share on other sites

(bis)

بریلوی حق صاحب

آپ نے جن صفحات کا عکس دیا ہے اُس میں محمد بن سائب بن برکۃ المکی کے حالات نہیں ہیں وہ

محمد بن سائب کلبی کے حالات ہیں۔

تہذیب الکمال فی اسمائ الرجال کھول کر دیکھیں

آپ جس کی بات کررہے ہیں اُس کے حالات صفحہ 246سے شروع ہوتے ہیں

محمد بن سائب بن برکۃ المکی کے حالات صفحہ 244پر ہیں۔

ahmad 1.jpg

ahmad 2.jpg

Edited by Khalil Rana
Link to post
Share on other sites

محترم.......سگ مدینہ

 

آپ نے جو سند دی......

اور اس کی تخریج نقل کی.....کیا اس کا سکین پیج مل جائے گا....سند کی توثیق کا....

 

جس میں محمد بن سائب بن برکۃ المکی کا پورا نام شامل.ہو

 

وہابی نے محمد بن السائب کلبی نامی راوی کو چونکہ محمد بن سائب بن برکۃ المکی بنا کر پیش کیا ہے سس لئے سند کا سکین چاہئے.....

..

آپ نے الوفاہ جلد 1 کا حوالہ دیا مجھے اس میں سے نہیں ملا.....

Link to post
Share on other sites

Ye Hadees 

لم يكن لرسول اللَّه ظل، ولم يقم مع شمس قط إلا غلب ضوؤء الشمس، ولم يقم مع سراج قط إلا غلب ضوءه على ضوء السراج.

 

 

الجز3 المفقود من المصنف عبدالرزاق صفحہ:56 

mein bhi majood hy.. Jis ki sand bhi Sath mein scan page pe majood hy..
Isi Thread ki Post # 3 ko check krain..
Link to post
Share on other sites

مجھے الوفاء سے سند نہیں ملی اورالمفقود میں روایت کی سند نہیں ہے جو پیجز افضل صاحب نے دیئے

Bhai ye hadees ki sand hi toh hy.,

 

عبدالرزاق عن ابن جریج قال اخبرنی نافع ان ابن عباس

 

عبدالرزاق عن ابن جریج قال اخبرنی نافع ان ابن عباس قال لم یکن لرسول اللہ صلی اللہ تعالی علیک وسلم ظل ولم یقم مع شمس قط الاغلب وضوء ہ الشمس ولم یقم مع سراج قط الاغلب ضوء ہ ضوء السراج

‏*

الجز3 المفقود من المصنف عبدالرزاق صفحہ:56 

Link to post
Share on other sites

محترم_____ امتاع الاسماع میرے پاس موجود ہے اور میں یہ سند پہلے ہی دے چکا ہوں...وہابی کا اعتراض یہ ہے کہ اس سند میں محمد بن سائب المکی نامی راوی نہیں بلکہ محمد بن سائب الکلبی نامی راوی ہیں جو کہ ضعیف ہیں.........

میں نے اصل میں یہی بات پوچھی تھی کہ محمد بن سائب المکی نامی راوی کا پورا نام سند میں مل.جائے تاکہ یہ روایت صحیح ثابت ہو........

Link to post
Share on other sites

is riwayat ki 3 sanad hai...jis ki waja se ye riwayat zaeef na rahi... shawahid ke bina per..

 

قال أحمد بن عبد اللَّه الغدافي أخبرنا عمرو بن أبي عمرو عن محمد بن السائب عن أبي صالح عن ابن عباس رضي اللَّه عنه: لم يكن لرسول اللَّه ظل، ولم يقم مع شمس قط إلا غلب ضوء الشمس، ولم يقم مع سراج قط إلا غلب ضوءه على ضوء السراج  (امتاع الاسماع

 

 
عبدالرزاق عن ابن جریج قال اخبرنی نافع ان ابن عباس لم يكن لرسول اللَّه ظل، ولم يقم مع شمس قط إلا غلب 

 

(ضوؤء الشمس، ولم يقم مع سراج قط إلا غلب ضوءه على ضوء السراج  (عبدالرزاق

 

 
أخرج الْحَكِيم التِّرْمِذِيّ من طَرِيق عبد الرَّحْمَن بن قيس الزَّعْفَرَانِي عَن عبد الْملك بن عبد الله بن الْوَلِيد عَن ذكْوَان ان رَسُول الله صلى الله عَلَيْهِ وَسلم لم يكن يرى لَهُ ظلّ فِي شمس وَلَا قمر
خصائص الکبری

 

 

 

Link to post
Share on other sites
  • 2 months later...
  • 1 month later...
  • 10 months later...
On 10/5/2016 at 10:27 AM, Khalil Rana said:

(bis)

بریلوی حق صاحب

آپ نے جن صفحات کا عکس دیا ہے اُس میں محمد بن سائب بن برکۃ المکی کے حالات نہیں ہیں وہ

محمد بن سائب کلبی کے حالات ہیں۔

تہذیب الکمال فی اسمائ الرجال کھول کر دیکھیں

آپ جس کی بات کررہے ہیں اُس کے حالات صفحہ 246سے شروع ہوتے ہیں

محمد بن سائب بن برکۃ المکی کے حالات صفحہ 244پر ہیں۔

ahmad 1.jpg

ahmad 2.jpg

جناب اس کی سند واقعی ضعیف ہے اس میں موجود محمد بن سائب الکبی ہی ہے کیوں کہ اس پر جرح ہے کہ اسکی روایت ابو صالح سے جھوٹی ہیں.  یہی امام بخاری سے جرح ہے.  اس یہ تعین ہو گیا الکلبی کا ابو صالح سے روایت کرتا ہے.  جبکہ جس کا ترجمہ آپنے دیا اس میں برکتی کا مجھے کہیں ترجمہ نہیں ملا کہ اس نے ابو صالح سے روایت کی ہو... یہ حدیث اصول کے لحاظ سے اس سند سے موضوع ہوگی.  لیکن جیسا کہ مصنف میں موجود ہے تب وہ صحیح اور اس سے تقویت پا کر یہ حدیث صحیح کہلائے گی مگر سند اسکی صحیھ نہیں جس میں سائب ہہے.. اگر کسی بھائی کے پاس یہ ثبوت ہو کہ سائب برکتی بھی ابو صالح سے روایت کرتا ہے تو مدینہ مدینہ ہو جائے 

Link to post
Share on other sites

Join the conversation

You can post now and register later. If you have an account, sign in now to post with your account.
Note: Your post will require moderator approval before it will be visible.

Guest
Reply to this topic...

×   Pasted as rich text.   Paste as plain text instead

  Only 75 emoji are allowed.

×   Your link has been automatically embedded.   Display as a link instead

×   Your previous content has been restored.   Clear editor

×   You cannot paste images directly. Upload or insert images from URL.

Loading...
×
×
  • Create New...