Sign in to follow this  
Followers 0
Sunni Tehreek

Aik aur Wahabiyoun Ka Ajeeb Fatwa

42 posts in this topic

Wahabi Molvi ne fatwa diya ke agar koi aadmi toilet ke andar bishaab kar raha ho bahir audio lagi ho yani hadith wagera to koi masla nahin jaiz hai, balke Ibne Taymiyyah ke daada ka yeh amal ta, saat kehte hain acha nahin, agar zaroorat ho phir karna chahiye kyounke agar koi aisa kare to 2 ghantay toilet ke andar hi beta rahega hadith sune me !!!!

 

wahabion_ka_ajeeb_fatwa.gif 

Edited by Sag-e-Attar

Share this post


Link to post
Share on other sites

Ghair Muqalidiyat Isey Kehtay Hain... Apney Ijtihad Sey Jo Jee Mein Aaya Jawab Dey Diya...

Aur Ibn-e-Tamiyah Ki Taqleed Bhi Isey Hi Kehtey Hain Keh Bator Reference Apney Imam Ka Hawala.. Na Key Quran-o-Hadees...

 

(ja) Hafiz Sahib... Share Kerney Ka Shukriya...

Share this post


Link to post
Share on other sites

(bis)

(saw)

lolzzzzzzzzzzzzzz.......... :)

Share this post


Link to post
Share on other sites

thanks for sharing..

Share this post


Link to post
Share on other sites

Stupid wahabis.

 

munkereen of "taqleed" blindly adopting the saying of ibn e timmiya without any reference of quran o sunnah .

 

may ALLAH save us from their shar

Share this post


Link to post
Share on other sites

Posted (edited) · Report post

Wahabi Molvi ne fatwa diya ke agar koi aadmi toilet ke andar bishaab kar raha ho bahir audio lagi ho yani hadith wagera to koi masla nahin jaiz hai, balke Ibne Taymiyyah ke daada ka yeh amal ta, saat kehte hain acha nahin, agar zaroorat ho phir karna chahiye kyounke agar koi aisa kare to 2 ghantay toilet ke andar hi beta rahega hadith sune me !!!!

 

 

ہدایت کی پیروی کرنے والے پر سلام

 

اس بات کیا ثبوت ہے کہ فتوی مستند ہے۔ یونہی کہیں سے مجہول فتوی اٹھا کر کسی کے ذمہ لگا دینا دیانت نہیں ہے۔ پھر اس مسئلہ میں بریلوی مفتی کیا فتوی دیتے ہیں کہ اکثر انسان ٹوائلیٹ میں ہوتا ہے اور اذان یا تلاوت کی آواز آرہی ہوتی ہے۔ اب تلاوت یا آزان کی اس آواز کا سننا اس شخص کے لئے جائز ہے یا نہیں؟

Edited by shah

Share this post


Link to post
Share on other sites
ہدایت کی پیروی کرنے والے پر سلام

 

اس بات کیا ثبوت ہے کہ فتوی مستند ہے۔ یونہی کہیں سے مجہول فتوی اٹھا کر کسی کے ذمہ لگا دینا دیانت نہیں ہے۔ پھر اس مسئلہ میں بریلوی مفتی کیا فتوی دیتے ہیں کہ اکثر انسان ٹوائلیٹ میں ہوتا ہے اور اذان یا تلاوت کی آواز آرہی ہوتی ہے۔ اب تلاوت یا آزان کی اس آواز کا سننا اس شخص کے لئے جائز ہے یا نہیں؟

 

(salam)

 

Agar aap Ghor se perhen tu FATWA k nechey Fatwa Book with Page Number likha hoa hai .. Uthaymeen ka Fatwa Tha ye. oar Wahabi Website se hi lia gya hai ye fatwa .

 

aap 2 differnet Situations ko Apas mein mila rahe hein .. ager koi toilet mein aor azan shoro ho jaye tu woh AZAN us ne nahi shoroo ki , na hi woh usko Rook sakta hai .. JAB k is fatwe mein likha hai k Ibne Taeemiya k Saab k DADA ABU toilet mian jab jate tu apne larkay ko bahir bitha dete us ko kehte tum perho . aor Khud Under toilet use kerte... Phis is fatwe mein ijazet di gayi hai k tum audio player bahir laga ker toile use karo ,, bahir hadees perhi ja rahi hoo ya quran perha ja raha hoon aor wahabi molvi saab apna gand saaf ker rahe hoon , kia Quran o Hadees ki ye Hasiyet hai wahabi molviyoon k nazdeek?? Mere khayal se jo aap log quran sunat ka dawah kerte hein tu woh aise hi toilet mein beth ker hi sunte hongay :rolleyes:

fi-aman:

Share this post


Link to post
Share on other sites

Shahid Nazeer Bhai nay bohat achi baat kahi k bhai aap apnay moulvion ka fatwa to dain woh is baaray main kia kehtay hai?

 

Chalo fatawa main to koi hadees nahi di ....Aap loug kisi hadees say saabit ker dain k mana hai!

 

Main aap say aik sawal kerta hoon k jab aap loug Mehfil-e-Shabina main Quran loud speaker main padhatay hain to us waqat agar kisi banday ko tiolet jaanay ki zaroorat paish aa jaiy to woh kia keray?

Share this post


Link to post
Share on other sites
Chalo fatawa main to koi hadees nahi di ....Aap loug kisi hadees say saabit ker dain k mana hai!

zimnan araz hai yei usul ab aap yaad rakkheay ga

 

Main aap say aik sawal kerta hoon k jab aap loug Mehfil-e-Shabina main Quran loud speaker main padhatay hain to us waqat agar kisi banday ko tiolet jaanay ki zaroorat paish aa jaiy to woh kia keray?

 

ghairmuqallid hazrat ka mazkoora fatwa khudikhtiyari amal yani recording laga kar toilet may usay sunnay kay muta'allik hai na yei kay kisi ko achanak ya ghair ikhtiyari bahar say aawaz aa jaiay.

Share this post


Link to post
Share on other sites

Mujjay Sunni muftiyaan e karam ka toh pata nahin magar khadam ka yeh mowaqif heh kay agar kohi toilet meh jata heh aur bahir bilkhasoos is leyeh Quran kee tilawat ya Hadith kee casset lagata heh ya kissi bachay, baray ko hokam kerta heh kay woh peray takay woh toilet meh sunay ga toh pakka Kaffir, parlay darjay ka kaffir, firawn, dajjal, nimrood, aur wajid ul qatal, balkay esay shakhs kee puri nasl ko qatal kerna meh fakhr, sawaab, samajta hoon.

 

Han agar kissi aur jaga ya kohi aur lagata heh aur ek fard ko toilet meh azaan, tilawat kee awaaz aati heh toh yeh us ka kasoor nahin, adab ka taqaza heh kay woh apni tawajoh ko kissi aur taraf kernay kee koshish keray, toilet meh agar us ko awaaz aati heh toh us meh us ka irada shamil nahin thah is leyeh gunnah nahin.

 

Agar qasdan aur irada niyatan tape lagata heh ka toilet meh sunoon ga toh pakka Kaffir heh:

 

Surah 22 Verse 32: "Such (is his state): and whoever holds in honour the symbols of Allah, such (honour) should come truly from PIETY of heart."

 

Quran Shahirullah say heh aur is kee tazeem dil ka taqwah heh. aur qasdan tape lagani kay toilet meh sunoon ga, kuffr heh.

Share this post


Link to post
Share on other sites
zimnan araz hai yei usul ab aap yaad rakkheay ga

 

 

 

ghairmuqallid hazrat ka mazkoora fatwa khudikhtiyari amal yani recording laga kar toilet may usay sunnay kay muta'allik hai na yei kay kisi ko achanak ya ghair ikhtiyari bahar say aawaz aa jaiay.

 

 

بدعتی اور مشرک کے علاوہ ہر صحیح العقیدہ شخص کو السلام علیکم

 

سیف السلام صاحب آپ کو اس فتوی پر اس وقت اعتراض کا حق پہنچتا ہے جب آپ یہ ثابت کردیں کہ شریعت میں کسی شخص کو جب وہ ٹوائیلٹ میں ہو اختیاری طور پر حدیث سننے کی اجازت نہیں۔ اس سلسلے میں آپ حدیث پیش کرنے سے تو شاید قاصر رہیں اپنی فقہ ہی سے اسکا ثبوت پیش کردیں کہ امام ابو حنیفہ کا اس بارے میں کیا فتوی ہے۔

 

بغیر ثبوت پیش کئے اس فتوی پر اعتراض کرنا جہالت ہے۔ پھر یہ بھی بتائے گا کہ اگر یہ عمل غیر اختیاری ہو تو اس شخص کو کیا کرنا چاہئے۔ یعنی اگر کوئی شخص ٹوائلٹ میں ہو اور اسے قرآن کی تلاوت یا ازان کی آواز آرہی ہو تو اسے سننا چاہئے یا نہیں۔ دلائل کے ساتھ فتوی پیش کیجئے گا۔ علی صاحب کی طرح اپنی طرف سے چھوڑنے کی اجازت نہیں۔

Share this post


Link to post
Share on other sites
بدعتی اور مشرک کے علاوہ ہر صحیح العقیدہ شخص کو السلام علیکم

 

سیف السلام صاحب آپ کو اس فتوی پر اس وقت اعتراض کا حق پہنچتا ہے جب آپ یہ ثابت کردیں کہ شریعت میں کسی شخص کو جب وہ ٹوائیلٹ میں ہو اختیاری طور پر حدیث سننے کی اجازت نہیں۔ اس سلسلے میں آپ حدیث پیش کرنے سے تو شاید قاصر رہیں اپنی فقہ ہی سے اسکا ثبوت پیش کردیں کہ امام ابو حنیفہ کا اس بارے میں کیا فتوی ہے۔

 

بغیر ثبوت پیش کئے اس فتوی پر اعتراض کرنا جہالت ہے۔ پھر یہ بھی بتائے گا کہ اگر یہ عمل غیر اختیاری ہو تو اس شخص کو کیا کرنا چاہئے۔ یعنی اگر کوئی شخص ٹوائلٹ میں ہو اور اسے قرآن کی تلاوت یا ازان کی آواز آرہی ہو تو اسے سننا چاہئے یا نہیں۔ دلائل کے ساتھ فتوی پیش کیجئے گا۔ علی صاحب کی طرح اپنی طرف سے چھوڑنے کی اجازت نہیں۔

 

Aap daleel pesh keren nah kay esa kerna jaiz heh?

 

Wesay ek sawaal heh, zehn meh aya toh socha pooch loon, umeed heh bura nahn manaho gay.

 

Agar aap bathroom me naha rahy ho to kya us waqt jin kay aap izzat kartay ho kia un kay baray meh socho gay? 

Aap kia samajtay hen kay yeh be'adabi, begherati hogi ya nahin? Wesay mujjay toh pata heh aap kay leyeh esa kerna bilqul bura nahin hoga balkay aap toh esa kertay bee hoon gay aur barelwi ko jhoota sabit kernay kay leyeh demonstrate kernay kay leyeh bee tiyaar ho jahen ga, aap say bilqul yahee tawaqoh heh.

 

Quran kee mazallah sirf Wahabi mazhib meh yeh hee maqam heh kay toilet me suna jahay.

Edited by Saif ul Islam
Apni Language ka khas khayal rakkhain yei aaik general forum hai

Share this post


Link to post
Share on other sites
Aap kia samajtay .

 

JIs ko is tarah k ganday khiyal aatay hain woh is tarah ki harkatain kertay hain..........Bhai nay to sirf itna hi poocha hai k is k khilaaf koi daleel hai to paish kero!Aur tum is tarah ki gandi guftagoo per utar aaya ho.Tum aalim ho ya Jahil aalim ho....jis ko baat kernay ki tameez nahi......

 

Agar is k khilaf daleel hai to paish kero warna khamosh raho.

Share this post


Link to post
Share on other sites

واہ شاھد بھاءی واہ بہت ہی خوب ان لوگوں کو انکا چہرہ فقہ حنفی کے آءینے میں دکھاتے رہیں۔لیکن شرم سے یہ لوگ آری ہیں۔یہ لوگ تو ہیں ہی فقہ حنفی کے پجاری نہ قرآن پڑھا نہ حدیث رسول اور ایمان لے آے ہدایہ اور فتاوی علمگیری و دیگر فضول کتابوں پر۔ اسی لیے یہ لوگ اخلاق سے عاری ہیں۔فقہ حنفی پڑھ کر تو پھر آدمی ایسی ہی زبان استعمال کرتا ہے جیسی کے علی صاحب نے کی ہے آپ انہیں الفاظوں کے اتنے جوتے مار چکے ہیں پھر بھی شرم ان کو آتی نہیں۔

Share this post


Link to post
Share on other sites

JOh meh nay sawaal poocha thah us ka jawab doh, Quran kay baray meh ulti seedi bateh kero aur us ko toilet meh sunnay ko jaiz likho, aur dosri baat ko jo pahlay kaha ghalat samjoh keyun ihtiraam kis ka ziyada kerna chahyeh Quran ka ya tummeh apni maan ka.

 

Aksar esa hota heh kay jab kohi doob raha hota heh toh tinkay ko pakr ker sahara leta heh. Abh jab tooh subject per la jawab ho gaya toh phir abh jhoot bol ker ilzaam laga raha heh kay Fiquha e Ahnaaf kay nazdeeq, yeh ghaleez harkateh kerna jurm nahin is per tum meray saath seperate thread per one to one debate ker lu meh sabit keroon ga kay tum jhootay ho

 

Homosexuality ko early Fuqaha e Ahnaaf nay Zina nahin tehraya thah magar phir be is kay murtaqib ko sazza ka hokam deeya thah, sirf qaazi per chora thah kay kon see sazza dee jahay. Aur later Fuqaha e Ahnaaf nay mot'h ka hokam jaari keeya is leyeh homosexuality kee sazza mot'h be heh aur lashes be ho sakti heh imprisoment be ho sakti heh.

 

Baqi sab jhoot heh joh sirf deeni ghairat say aari shaks he hee bol sakta heh, beastility kay baray meh early aur later fuqaha ka hokam heh kay janwar ko be mara jahay aur esa amal krnay walay ko be mara jahay, later ulamah nay is kee sakhti meh kami kee aur janwar ko marnay aur agar mard dobara esa keray toh phir mot'h kee sazza deeh jahay.

 

Yeh Sharab peeena aap kay mazhib meh jahiz hoga, joh sharab khanay peenay kee cheese say banahi jahay mutlaqan haram heh fuqahat e ahnaaf kay nazdeeq sirf synthetic sharab joh petrolium say banahi jaati heh aur hair gels ya mouth wash meh istimaal hoti heh us ka istimaal jaiz heh.

 

Maan behan say moon kala kerna aap ka kaam hee ho sakta heh aur aap kay mazhib meh Talib ur Rehmaan nay ya joh shaks us kay saath betha thah us nay fatwah deeya heh kay agar nikkah kay beghera zina say larki peda ho toh zaani us zina say joh larki peda huwi heh us say nikkah ker sakta heh yehni zaani apni beti say nikkah ker sakta heh..

 

meh nay pahlay joh sawaal poocha thah us ka jwab doh munafiqeen kee tera begharati per keyun toolay ho

Share this post


Link to post
Share on other sites

wah wahabiyooo wah .... fatwa tum logon ko aor daleel hum se talab ker rahe ho ????????? :unsure: is se bada joke aor kia hoga , sara wahabi cult hi joke hai ... Quran o Sunnat ka Dawah Kerne Walo ager zara b sharam hai tu is fatwe ko sabit kerne k leye quran ya hadith pesh karo ... ager nahi ker sakte tu maan lo k tum apne mullah ki andhi taqleed ker rahe ho , aor us ki baat ko thukra nahi sakta .... Fiqh Hanafi per aiteraz kerne se pehle apne is molvi k fatwe ka tu jawab dooo ...... tum log hamesha jawab se bhagoo gey ....

Share this post


Link to post
Share on other sites

(salam)

 

tamam hazrat say guzarish hai kay plz apni language ka khas khayal rakkhain basurat e degar post delete kar di jaiy gee.

 

Shahid Nazeer sahab aap ka purana sawal jo mujh say tha aap par aisa baytuka sawal zaib tu nahee daita tha khair us kay kafi jawab aap ko aachukay hain.. aap nay fiqah hanafi pay jo mazeed aaitarazat keay hain aap apni wo post naiy topic bana kar zaror paish karain aur apnay references zaror lagaiay ga.

 

baki sab hazrat say phir guzarish hai kay zuban aur usloob ka khayal rakkhain aur mozo par he baat karian

 

wasslam

Share this post


Link to post
Share on other sites
(salam)

 

 

سیف السلام صاحب مجھے بدتمیزی کرنا یا بری زبان استعمال کرنا بالکل بھی پسند نہیں۔ لیکن آپکے علی صاحب بجائے دلائل دینے کے مسلسل اسی طرح کی گندی زبان استعمال کررہے ہیں۔ جسکی وجہ سے ہم بھی کبھی کبھی مجبور ہو جاتے ہیں۔

 

 

میرے بھائی بات یہ ہے کہ مذکورہ فتوی آپ لوگوں نے یہاں لگایا ہے۔ اور اس پر اعتراض بھی آپ لوگوں کا ہے کہ یہ عجیب اور غلط فتوی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ میں نے آپ سے مطالبہ کیا ہے کہ آپکے اس فتوی پر اعتراض کی دلیل کیا ہے۔ کیا میں نے کوئی غلط مطالبہ کیا ہے۔ اگر یہ فتوی ہم نے پیش کیا ہوتا پھر ہم ہی اس کی دلیل پیش کرنے کے پابند ہوتے۔

 

میرے بھائی جب فتوی پیش کرنے والے اور اس پر اعتراض کرنے والے آپ لوگ ہیں تو دلیل دینے کے بھی آپ ہی زمہ دار ہیں کہ آپ کے اس فتوی پر اعتراض کی کیا وجہ ہے۔

 

 

یہ ضرور یاد رکھئے گا کہ میں نے کہیں بھی یہ نہیں کہا کہ یہ فتوی صحیح ہے۔ میں نے صرف آپ سے پوچھا ہے کہ آپ اسے غلط کہ رہے ہو تو ہمیں بھی بتادو کہ اسکی دلیل کیا ہے تاکہ ہم بھی آپکی موافقت کریں۔ بصورت دیگر بغیر دلیل کے ہم اس فتوی کو کیسے غلط کہ سکتے ہیں۔

 

 

نہ تو میں نے اس فتوی کے صحیح ہونے کا دعوی کیا ہے اور نہ ہی اسکے غلط ہونے کا دعوی کیا ہے۔ سیف السلام صاحب یہ آپ پر منحصر ہے کہ آپ دلائل سے اسے غلط ثابت کرتے ہیں۔ یا دلائل پیش نہ کرکے اپنے آپ کو جھوٹا۔

Share this post


Link to post
Share on other sites

میرے بھائی بات یہ ہے کہ مذکورہ فتوی آپ لوگوں نے یہاں لگایا ہے۔ اور اس پر اعتراض بھی آپ لوگوں کا ہے کہ یہ عجیب اور غلط فتوی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ میں نے آپ سے مطالبہ کیا ہے کہ آپکے اس فتوی پر اعتراض کی دلیل کیا ہے۔ کیا میں نے کوئی غلط مطالبہ کیا ہے۔ اگر یہ فتوی ہم نے پیش کیا ہوتا پھر ہم ہی اس کی دلیل پیش کرنے کے پابند ہوتے۔

 

میرے بھائی جب فتوی پیش کرنے والے اور اس پر اعتراض کرنے والے آپ لوگ ہیں تو دلیل دینے کے بھی آپ ہی زمہ دار ہیں کہ آپ کے اس فتوی پر اعتراض کی کیا وجہ ہے۔

یہ ضرور یاد رکھئے گا کہ میں نے کہیں بھی یہ نہیں کہا کہ یہ فتوی صحیح ہے۔ میں نے صرف آپ سے پوچھا ہے کہ آپ اسے غلط کہ رہے ہو تو ہمیں بھی بتادو کہ اسکی دلیل کیا ہے تاکہ ہم بھی آپکی موافقت کریں۔ بصورت دیگر بغیر دلیل کے ہم اس فتوی کو کیسے غلط کہ سکتے ہیں۔

 

نہ تو میں نے اس فتوی کے صحیح ہونے کا دعوی کیا ہے اور نہ ہی اسکے غلط ہونے کا دعوی کیا ہے۔ سیف السلام صاحب یہ آپ پر منحصر ہے کہ آپ دلائل سے اسے غلط ثابت کرتے ہیں۔ یا دلائل پیش نہ کرکے اپنے آپ کو جھوٹا۔

Is joke of the day ke baad kya khayal hai aapki is thread me ki gayi sari post delte kyu na kar di jayein? kya apko lagta hai hamara waqt aapki tarah itna faltu hai ki aapki be sir ki bakwas ka reply karty jayein or akhir me akar ye chutkuly parhein? :rolleyes:

 

Share this post


Link to post
Share on other sites
Mujjay Sunni muftiyaan e karam ka toh pata nahin magar khadam ka yeh mowaqif heh kay agar kohi toilet meh jata heh aur bahir bilkhasoos is leyeh Quran kee tilawat ya Hadith kee casset lagata heh ya kissi bachay, baray ko hokam kerta heh kay woh peray takay woh toilet meh sunay ga toh pakka Kaffir, parlay darjay ka kaffir, firawn, dajjal, nimrood, aur wajid ul qatal, balkay esay shakhs kee puri nasl ko qatal kerna meh fakhr, sawaab, samajta hoon.

 

 

 

 

Ali sahib aap nay kaafir ka fatwa to aisay laga diya jaisay fatwa dainay ka aap ko theeka dia gia ho....Chalo fatwa to aap nay laga dia ab mujhay yeh batao k agar koi fatwa day k toilet main AuzuBillah padha kero......to us k baaray main aap ka kia fatwa hai?Zara is baaray main b fatwa day dain! :rolleyes:

Share this post


Link to post
Share on other sites

Wahabiyoon ko kab sharam aye gi ? aor kab is khabees fatwe k khilaf kuch bolen ge .... abhi tak tu apa dekh sakte hain k wahabi idher se udher bhagne mein masroof hain .. k kisi tarha jaan chut jaye .... Wahabiyooooo tum ko Bin Baaz ki Kani Ankh ka wasta jawab de dooo :D

Share this post


Link to post
Share on other sites

Mairi koshish thi k main jawab main scan page lagaata laikin....Kal InshAllah main scan page b upload ker doon ga.......

 

 

 

 

Aap k Ghous Pia Jilani  (Abdul Qadir Jeelani(RA)) apni kitab Ghuniat-ul-Talbeen main likhtay hain k toilet main zikar Elahi kerna theek nahi laikin sirf Auzubillah padh sakta hai.........

 

Baaqi scan page main kal post keroon ga.

Share this post


Link to post
Share on other sites
Guest
This topic is now closed to further replies.
Sign in to follow this  
Followers 0

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.