Sign in to follow this  
Followers 0
Ghulam.e.Ahmed

نزر حضرت اِمامِ عالی مقام رضی اللہ عنہ

7 posts in this topic

ایک کوشش، غلطی ہو تو معاف فرما کر اصلاح فرمائیے گا۔

 

پی کے شہادت دے جام نوں

اُچّا کیتا اے اسلام نُوں

اللہ اُچّا کیتا تُواڈی شان نُوں

وہابی جلدا رَہوے اِس شان تُوں

 

سلام ہو بے حد آپ پر اے ہمارے امام

درُود ہو بے حد آپ پر اے ہمارے امام

 

جزاک اللہ

 

 

1 person likes this

Share this post


Link to post
Share on other sites

Khazaane ki zeenat ko Almas kahte hain, Tamanna paani ki hoti hai tabhi to Pyaas kahte hain, Jahan peetei'n hain sab paani use kahte hain sab dariya, Jo dariya ko pilaata hai use ABBAS kahte hain.

1 person likes this

Share this post


Link to post
Share on other sites

عروضی حوالے سے آپ کی اصلاح کرنے سے قاصر ہوں کہ مجھے یہ زبان [غالبا پنجابی ] نہیں آتی اور اشعار کے اوزان کی درست ترتیب معلوم کرنے کے لئے صحیح تلفّظ ضروری ہے


طالب دعا

1 person likes this

Share this post


Link to post
Share on other sites

nazar imam aali muqaam hazrat imam hussain  ala hissalaam  theek hay,  punjaabi bhee theek likhee hay. jazakALLAH

Share this post


Link to post
Share on other sites

 

عروضی حوالے سے آپ کی اصلاح کرنے سے قاصر ہوں کہ مجھے یہ زبان [غالبا پنجابی ] نہیں آتی اور اشعار کے اوزان کی درست ترتیب معلوم کرنے کے لئے صحیح تلفّظ ضروری ہے

طالب دعا

 

 

جزاک اللہ

اصل میں اصلاح سے میرا بُنیادی مقصد یہ ہوتا ہے کہ کہیں کوئی غیرشرعی بات، کوئی بے ادبی یا کوئی غیر اخلاقی بات نہ ہو۔ جو اصل مقصد ہے وہ تو یہ ہے کہ دِل کی بات کہی جائے، اگر رَدِیف ، قافیہ وغیرہ میں غلطی ہو بھی جائے تو ایمان بچ جائے گا اگر خدانخواستہ کوئی بے ادبی ہوگئی تو پھر؟ بس اتنا مقصد ہے۔

1 person likes this

Share this post


Link to post
Share on other sites

جزاک اللہ

اصل میں اصلاح سے میرا بُنیادی مقصد یہ ہوتا ہے کہ کہیں کوئی غیرشرعی بات، کوئی بے ادبی یا کوئی غیر اخلاقی بات نہ ہو۔ جو اصل مقصد ہے وہ تو یہ ہے کہ دِل کی بات کہی جائے، اگر رَدِیف ، قافیہ وغیرہ میں غلطی ہو بھی جائے تو ایمان بچ جائے گا اگر خدانخواستہ کوئی بے ادبی ہوگئی تو پھر؟ بس اتنا مقصد ہے۔

 

آپ نے بلکل صحیح کہا ، میرا بھی یہی مسلہ ہے، اصلاح کا

عروض سے کلام موزوں اور متوازن ہو جاتا ہے

آپ کا یہ شعر

 

 

سلام ہو بے حد آپ پر اے ہمارے امام

درُود ہو بے حد آپ پر اے ہمارے امام

 

اگر آپ سرخ الفاظ کو ہٹا دیں تو اب شعر موزوں ہو گیا ہے

سلام   آپ پر  اے ہمارے امام

درود آپ پر اے ہمارے امام

س لا ما ، پ پر اے ، ہ ما رے ، ا ما م

١ ٢ ٢ ، ١ ٢ ٢ ، ١ ٢ ٢ ، ١ ٢ ١

د رو دا ، پ پر اے ، ہ ما رے ، ا ما م

١ ٢ ٢ ، ١ ٢ ٢ ، ١ ٢ ٢ ، ١ ٢ ١

فعولن، فعولن ، فعولن ، فعول

یہ بحر متقارب میں  ہے

دعا گو و طالب دعا

(ja)  :) 

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!


Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.


Sign In Now
Sign in to follow this  
Followers 0

  • Recently Browsing   0 members

    No registered users viewing this page.