wasim raza

Members
  • Content count

    445
  • Joined

  • Last visited

  • Days Won

    22

wasim raza last won the day on July 21 2017

wasim raza had the most liked content!

Community Reputation

39 Excellent

1 Follower

About wasim raza

  • Rank
    Makki Member
  • Birthday September 24

Profile Information

  • Gender
  • Location
    khwaja ka hindustan. Goa
  • Interests
    kalam e Raza.

Previous Fields

  • Madhab
    Hanafi
  • Sheikh
    Tajushariyah

Recent Profile Visitors

898 profile views
  1. منکر علم غیب نبی علیہ السلام سے ایک دلچسپ مکالمہ منکرین علم غیب جب دلائل میں پھنس جاتے ہیں تو فوراً الٹے سیدھے سوالات کرنا شروع کردیتے ییں.... میں نے احادیث سے علم غیب مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم پر چند دلائل دیے.... اس کے جواب میں معترض کہتا ہے کی نبی علیہ السلام کی ان باتوں کو سن کر صحابہ رضی اللہ بھی غیب دان ہوگئے... ان سے یہ غیب تابعین میں منتقل ہوا اسی طرح ہم تک پہنچا اور ہم بھی غیب دان ہوگئے. الجواب بسمہ اللہ الرحمن الرحیم 1- اللہ رب العزت نے قرآن میں بہت سی غیب کی باتیں بتائی ہیں , ان باتوں کو پڑھ کر تم بھی غیب دان بن گئے؟؟؟؟ تمہیں بھی غیب کا علم آگیا؟؟؟ تم صرف قرآن میں اللہ کے بیان کی تصدیق کر سکتے ہوں... ان مغیات کی کیفیات نہی جان سکتے... 2- میں اوپر ہزار دفع غیب کی تعریف بتا چکا ہوں.. ایک دفع پھر مثال دیتا ہوں.. جبرائیل علیہ السلام کی ذات غیب ہے.. نبی علیہ السلام نے جبرائیل علیہ السلام کو ان کی اصل شکل و صورت میں دیکھا ہے... اور نبی علیہ السلام نے یہ بھی بتایا کی ان کے اتنے پر ہیں وغیرہ وغیرہ....... اب جبرائیل علیہ السلام کی ذات نبی علیہ السلام کے لیے غیب نہی رہی.. مگر نبی کی امت کے لیے جبرائیل علیہ السلام کی ذات غیب ہے... امت صرف نبی علیہ السلام کے بیان کی تصدیق کر سکتی ہے............. بلکل اسی طرح, جنت کا علم, دوزخ کا علم, فرشتوں کا علم, منکر نکیر کا علم, عذاب قبر کی کیفیت کا علم, نزول وحی کا علم, معراج کے سفر میں انبیاء علیھم السلام سے ملاقات کا علم , انبیاء کو ان کے قبور میں نماز ادا کرتے ہوئے دیکھنا, ماضی و مستقبل کا علم... وغیرہ وغیرہ..... ان سب باتوں کا علم نبی علیہ السلام کے لیے غیب نہی ہے.....مگر انکی امت کے لیے یہ سب غیب ہیں... امت صرف نبی علیہ السلام کے باتوں کی تصدیق کرکے ان پر ایمان لا سکتی ہے....... کیفیات کے بارے میں نہی جان سکتی... آخری دفع بھیجہ کھول کر سمجھو.. اللہ کے لیے کوئی شئے غیب نہی ہے اللہ ہر چیز جانتا ہے پھر اللہ تعالی کو عالم الغیب کیوں کہتے ہیں ؟؟؟؟ درحقیقت وہ ہمارے لیے غیب ہے اس لیے اللہ کو عالم الغیب کہتے ہیں.. بلکل اسی طرح اللہ نے اپنے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو جن مغیات کا علم دے دیا ہے وہ نبی علیہ السلام کے لیے غیب نہی رہا..... درحقیقت وہ ہمارے لیے غیب ہیں..... ہمارا کام فقط قرآن و احادیث میں ان مغیات کے بارے میں جان کر انکی تصدیق کرکے ایمان لانا ہے...
  2. Iska urdu tarjuma darkar hai....
  3. Iss kitab ka jawab mitega??
  4. Makashafa.WordPress.com
  5. books.nafseislam.com/read-book.php?book_id=461&book=fiqh-al-faqeeh
  6. Ji fatwa laane gaye hain, Lautne k liye QAYAMAT tak ka waqt to Chahiye janab ko.......
  7. عجیب جہالت ہے نجدیوں کی، اک طرف تقلید کو شرک کہتے ہیں ، دوسری طرف حنفیوں(امام زیعلی) کو خود رحمہ اللہ لکھ کر خود بھی مشرک ہو جاتے ہیں....
  8. www.islamimehfil.com/topic/17654-contact-dar-ul-ifta-for-your-shari-questions/#entry79968
  9. Science to kehti hai ki BANDAR SE AADMI BANA" kya najdi isko bhi tasleem karta hai ???
  10. As recently as 1966, sheik Abd el Aziz bin Baz asked the king of Saudi Arabia to suppress a heresy that was spreading in his land. Wrote the sheik: "The Hell Koran, the Prophet's teachings, the majority of Islamic scientists, and the actual fact all prove that the sun is running in its orbit... and that the earth is fixed and stable, spread out by God for his mankind... Anyone who professed otherwise would utter a charge of falsehood toward God, the Koran, and the Prophet" from http://chrome-extension://oemmndcbldboiebfnladdacbdfmadadm/
  11. https://www.google.co.in/url?sa=t&source=web&rct=j&url=http://www.nafseislam.com/en/Literature/Urdu/Books/Maslay-e-ZameenSakinHaiSabootAyatSe/ZameenSakinHaiSabootAyatSe.htm&ved=0ahUKEwiI8ILx5uvOAhUJq48KHRSKBUkQFggpMAQ&usg=AFQjCNFUhWXOisXgm-wVjQOQbUEadqYR4Q Arab mufti:www.independent.co.uk/news/world/middle-east/saudi-muslim-cleric-claims-the-earth-is-stationary-and-the-sun-rotates-around-it-10053516.html